تازہ ترین
بورے والا:ڈی سی او وہاڑی کا چیئرمین بلدیہ کے ہمراہ رمضان بچت بازار کا دورہ۔         بورے والا: تیز رفتار ڈالہ کی موٹر سائیکل کو ٹکر،45سالہ نوجواں شدید زخمی۔         بورے والا: خون سفید ہو گیا پہلے بیٹے کے ہاتھوں ماں قتل اب بھائی کے ہاتھوں بھائی قتل۔         ”پاکستان کیساتھ کوئی میچ بھی نہیں، پھر بھی پسینے چھوٹ رہے ہیں۔۔۔“ بنگلہ دیشی کپتان کی چھٹی حس ”پھڑکنے“ لگی، پاکستانی ٹیم کے بارے میں ایسی بات کہہ دی جس کا چرچا پوری دنیا میں ہے، جان کر آپ ٹورنامنٹ کیلئے مزید پرجوش ہو جائیں گے         ڈرائیور کی بیٹی پاکستان کی وہ اداکارہ جو پیدائش کے وقت اتنی خوبصورت تھی کہ پیدا ہوتے ہی مالکان نے اسے گود لے لیا اور پھر بڑی ہو کر وہ کرکٹر سرفراز نواز کی دلہن بنی         امریکی صدر ٹرمپ کی جانب سے مسلمانوں کو رمضان المبارک کی مبارکباد کا پیغام         رحیم یار خان : جائیداد کے تنازع پر چچا زاد بھائیوں نے کزن کی ناک اور ٹانگ کاٹ دی         نشے کی حالت میں ڈرائیونگ : عدالت نے نیوزی لینڈ کے فاسٹ بالرکو سزا سنا دی         صدر ممنون حسین کی ماہانہ تنخواہ 10 لاکھ سے بڑھ کر16 لاکھ روپے ہوگئی         عمران خان اے این پی کی وکٹ لے اڑے،عامر ایوب پی ٹی آئی میں شامل        

بچوں کی دنیا

شکر گزار

pic_976fb_1494486143

وہ پوچھ رہا تھا کہ ہمارے پاس گاڑی کیوں نہیں اور․․․․․ سلمیٰ صفی: ”احدعبداللہ․․․․!“ سکول گیٹ پر کھڑے چوکیدار نے جیسے ہی میرا نام پکارا میں نے جلدی سے اپنا بیگ اٹھایااور باہر کی طرف بھاگا۔”بابا․․․․ آج پھر اتنی دیر لگا دی“۔میں کب سے انتظار کررہا تھا‘دیکھیں کتنی گرمی ہے“ بابا نے میری بات پر مسکراکردیکھا اور بولے۔ ” صاحبMore

Read More »

کوااور سمیع اللہ

pic_42df2_1493983082

ِِ”امی جانی!․․․․․امی جانی! سمیع بھیا مجھے چپس نہیں کھانے دے رہا اور خود کھا رہا ہے“۔چھوٹی مومنہ نے امی جانی سے سمیع کی شکایت کی۔ ” امی جانی میں کیوں اسے چپس دوں یہ چپس میرے ہیں اور میں اکیلے ہی کھاؤں گا۔اسے نہیں دوگا“۔ امی جانی کے بولنے سے پہلے ہی سمیع نے اپنا مئوقف واضح کردیا۔ بیگم جاویدMore

Read More »

چالاک ہرن اور چیتا

pic_5298b_1493387798

چالاک ہرن نہ صرف اپنی پھرتی اورتیزی کی وجہ سے جنگل میں مشہور تھا بلکہ اپنے نام کی طرح بے حد چالاک بھی تھا۔ ایک دن وہ جنگل میں مزیدار پھلوں اور دوسری کھانے پینے کی چیزوں کے لے ے گھوم رہا تھا۔ اگر چہ وہ بہت چھوٹا تھا مگر وہ بالکل بھی خوفزدہ نہیں تھا۔ اسے پتہ تھا کہMore

Read More »

والدہ کا پرس

pic_1488458854

ایک بار ایک عزیز کی شادی کے سلسلے میں والدہ صاحبہ کو لے کر پرل کانٹی نینٹل ہوٹل جانے کا اتفاق ہوا۔ وہاں ہمارے ایک قریبی عزیز ملنے آئے ۔ انھوں نے والدہ کو ایک بڑی رقم دی اور کہا کہ یہ امانت ہے اور جب مجھے ضرورت ہوگی ، میں لے لوں گا۔ ایک بار ایک عزیز کی شادیMore

Read More »

دوستی اور ایثار

pic_1487745458

کسی بادشاہ کے دربار میں بہت سے خدمت گاروں میں دو گہرے دوست بھی تھے ۔ باقر دریا سے پانی بھر کر لاتا تھااور عاقل سوداسلف لانے اور کھانے پکانے پر مامور تھا۔ عاقل نہایت لاپروا اور فضول خرچ تھا ، مگر اس کے ساتھ نہایت ذہین بھی تھا۔ اُم عادل : کسی بادشاہ کے دربار میں بہت سے خدمتMore

Read More »

مچھلی کا پیغام

pic_1487166664

کسی بستی میں ایک ایمان دار مچھیرا علی رضا رہتا تھا ۔ اس کا صرف ایک ہی بیٹا تھا۔ وہ اپنی بیوی اور بیٹے کے ساتھ ہنسی خوشی زندگی گزار رہاتھا۔ دونوں میاں بیوی کی خواہش تھی کہ اپنے بیٹے کو پڑھا لکھا کر بڑا آدمی بنائیں ۔ ردا انور شہزاد : کسی بستی میں ایک ایمان دار مچھیرا علیMore

Read More »

پرانا سکہ

pic_1486460693

جب میں مدرسے سے واپس آیا تو حکیم صاحب کو دادا کے کمرے سے نکلتے ہوئے دیکھا ۔ دیکھیں برخوردار ! میاں صاحب کو چینی اور میٹھے سے پرہیز کرانا ہوگا۔ حکیم صاحب نے والد صاحب سے کہا ۔ شاہین طارق: جب میں مدرسے سے واپس آیا تو حکیم صاحب کو دادا کے کمرے سے نکلتے ہوئے دیکھا ۔ دیکھیںMore

Read More »

رقم کہاں سے آئی

pic_1486044563

میری والدہ صاحبہ بڑی عبادت گزار اور اللہ پر توکل کرنے والی ، بڑی شعار اور باہمت خاتون تھیں ۔ والد صاحب کی تنخواہ بہت کم تھی ، لیکن والدہ صاحبہ نے اس مختصر تنخواہ میں بھی ہم بہن بھائیوں کی عمدہ تعلیم اور اچھی تربیت کی۔ کبھی اللہ تعالیٰ کی ناشکری نہیں کی۔ حبیب اشرف صبوحی : میری والدہMore

Read More »

میلا اور بیل

pic_1485426189

ایک دن دوست سہراب بابومجھ سے کہنے لگے کہ ان کے ساتھ نواب صاحب کی ریاست چلوں ۔ ریاست میں ہرسال بسنت بہارکامیلا لگتا ہے ۔ میں نے مصروفیت کا بہانا کیا، توخفاہو کربولے : میاں ! تم جوجنگلوں میں جانوروں کے پیچھے مارے مارے پھرتے ہو، کبھی انسانوں کے ساتھ بھی وقت گزارلیا کرو۔ جاوید اقبال : ایک دنMore

Read More »

نافرمان چُن مُن

pic_1484205849

سگوپال کے کھیت میں ایک مرغی تھی جس کا نام مْن مْن مرغی تھا۔ اس کا ایک چوزہ تھا۔ جسے گوپال کے گھر والے چُن مُن کے نام سے پکارتے تھے۔ چْن مْن تھا بڑا شرارتی اور نافرمان۔ جب دیکھو تب کسی نہ کسی کو ستاتا اور پریشان کرتا۔ سگوپال کے کھیت میں ایک مرغی تھی جس کا نام مْنMore

Read More »