تازہ ترین
بورے والا:ڈی سی او وہاڑی کا چیئرمین بلدیہ کے ہمراہ رمضان بچت بازار کا دورہ۔         بورے والا: تیز رفتار ڈالہ کی موٹر سائیکل کو ٹکر،45سالہ نوجواں شدید زخمی۔         بورے والا: خون سفید ہو گیا پہلے بیٹے کے ہاتھوں ماں قتل اب بھائی کے ہاتھوں بھائی قتل۔         ”پاکستان کیساتھ کوئی میچ بھی نہیں، پھر بھی پسینے چھوٹ رہے ہیں۔۔۔“ بنگلہ دیشی کپتان کی چھٹی حس ”پھڑکنے“ لگی، پاکستانی ٹیم کے بارے میں ایسی بات کہہ دی جس کا چرچا پوری دنیا میں ہے، جان کر آپ ٹورنامنٹ کیلئے مزید پرجوش ہو جائیں گے         ڈرائیور کی بیٹی پاکستان کی وہ اداکارہ جو پیدائش کے وقت اتنی خوبصورت تھی کہ پیدا ہوتے ہی مالکان نے اسے گود لے لیا اور پھر بڑی ہو کر وہ کرکٹر سرفراز نواز کی دلہن بنی         امریکی صدر ٹرمپ کی جانب سے مسلمانوں کو رمضان المبارک کی مبارکباد کا پیغام         رحیم یار خان : جائیداد کے تنازع پر چچا زاد بھائیوں نے کزن کی ناک اور ٹانگ کاٹ دی         نشے کی حالت میں ڈرائیونگ : عدالت نے نیوزی لینڈ کے فاسٹ بالرکو سزا سنا دی         صدر ممنون حسین کی ماہانہ تنخواہ 10 لاکھ سے بڑھ کر16 لاکھ روپے ہوگئی         عمران خان اے این پی کی وکٹ لے اڑے،عامر ایوب پی ٹی آئی میں شامل        
news-1495034509-3980_large

وزیر داخلہ بلوچستان سرفراز بگٹی ’رنگے ہاتھوں‘پکڑے گئے

تلور ایک انتہائی نایاب پرندہ ہے جو کہ پاکستان کے کچھ مخصوص علاقوں میں بھی پایا جاتاہے جس کے شکار کیلئے عرب شہزادے بھی پاکستان آ تے رہتے ہیں اور اس حوالے سے حکومت کو بھی کافی تنقید کا سامنا کرناپڑتاہے تاکہ اس نایاب مہمان پرندے کی نسل کو بچایا جا سکے جبکہ اس کے شکار پر پابندی بھی عائد کی گئی اور اگر کوئی ایسا کرتاہوا پکڑا جائے تو اس کیخلاف کارروائی بھی عمل میں لائی جاتی ہے ۔
تفصیلا ت کے مطابق اس سب کے باوجود بلوچستان کے وزیر داخلہ سرفراز بگٹی کی ایک فیس بک صارف نے ایک تصویر شیئر کی ہے جسے دیکھ کر شہریوں کی آنکھیں کھلی کی کھلی رہ گئیں ہیں ۔سرفراز بگٹی اپنی گاڑی کی چھت پر بیٹھے ہیں اور ان کے ہاتھ میں شکار کھیلنے والی بندوق ہے جبکہ گاڑی کے بونٹ پر ڈھیر سارے نایاب پرندے تلو ر ’مردہ‘ حالت میں پڑے ہیں جو کہ ممکنہ طور پر شکار کر کے پکڑے گئے ہیں ۔
فیس بک صارف محمد وقاص میمن نامی شخص کی جانب سے شیئر کی گئی جس پر شہریوں نے سخت الفاظ کا استعمال کرتے ہوئے تنقید کا نشانہ بنایا ،فیس بک صارف نے پوسٹ کے ساتھ پیغام درج کیا کہ ’میں صرف پوچھنا چاہتاہوں کہ بلوچستان کے وزیر آزادنہ طور پر اس نایاب پرندے کا شکار کرہے ہیں کیا یہ قانونی ہے یا غیر قانونی ‘۔
وقاص میمن کی اس پوسٹ پر عمران ظہیر نامی صارف نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ ’مراعات یافتہ افراد کیلئے کوئی قانون نہیں قانون صرف عام عادمی کیلئے ہے‘۔اس کا کہناتھا کہ یہ تو سنا تھا کہ دوہری شہریت ہوتی ہے لیکن کسی ملک میں دوہرا قانون ہو یہ نہیں سنا تھا ،اور یہ صرف ہمارے ملک میں ہی ہوتاہے۔

کمنٹ کریں - Leave Comments

آپ کا ای میل خفیہ رکھا جائے گا۔ تمام فیلڈ فل کرنا ضروری ہیں۔ Your Email will never published. *

*